Jamat Ud Dawa Videos

   Shaikh Hafiz Saeed Juma Kutba at Taqwa Masjid in Ramazan 2012





Professor Hafiz Saeed's Massage to Internet Users

42 comments:

Abdurrehman Tufail said...

http://www.farhathashmi.com/wp-content/plugins/goi-medialibrary/audioplayer.php?fileid=aHR0cDovL2Rvd25sb2FkLmZhcmhhdGhhc2htaS5jb20vZG4vUG9ydGFscy8wL2F1ZGlvL1JlY2l0YXRpb24vbWFzaGFyaS9tcDMvMDAxLm1wM3x8MQ==&nonce=9e2558ccf2

Abdurrehman Tufail said...

naeem ul rehman markzi masjid jamat dawa araian wala kangan pur kasur
isay apni web per zaroor lagaien bhai

Lashkar E Islam said...

app apna taruf karwain bahi jan

Raheem said...

Assalam alaikum sirf burma hi nai balkey pakistan main bhi islam dushman

or mulk dushman hindu mukhtalif idarou mai sazish ka tahat kaarfarma hai

aik hindu larki jiska nam sonia rajpal ha karachi se farar ho kar islamabad k sector i-8 mai rihayesh pazeer hai
ye gher shadi shuda larki hai or higher education ka idare mai kam kar rahi hai

is ka kaam islam or pakistan ka khilaaf sazish par mabni hai
yeahi nahi balka iska bhai bhi ptv ka h-9 daftar mai tawhin e risalat ka irtikab karta hai

or in logo ko koi rokney tokney wala nai kiunke
kisi NGO key fund ka tahat ye log ameer ho gaye hai

sonia rajpal ka bhai mukesh kumar ptv ka producer ha or APE020 number ki safaid gari chalata ha
iss shakhs ki ptv mai madad karna wala shakhs farrukh afzal nami ha

jo murtid e deen or shatim e rasool ha or iss hindu shakhs ka sath mil ka islam ka khilaaf androoni tor pe sazish karta hai

iss larki sonia ka phone number ye hai
03212751046

mukesh kumar ka phone number ye hai 03453085145

farrukh afzal ka phone number ye ha 03215383615

khudara agar aap ko watan e aziz se muhabat hai tou in logo ko iss mulk ko tabah karney
or humarey piyarey nabi SAW ki shaan mai gustakhi karna sa rokein werna humari qoum per azab ayega
jab aisa mushriqeen dandanatey phiren ge or inko hamara apney hi log pushpanahi karaege

Muhammad Yahya said...

you have a very informative blog. you can read more about pakistan army here.
Pakistan Army

ehsanelahi155 said...

Assalam.o.oAlaikum

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،
"میں نے کچھ لوگ ایسے بھی "غریب" دیکھے ھیں جن کے پاس دولت کے سوائے کچھ نہں"۔

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،
اللہ کے نام سے۔
"یہ اللہ کی کتاب (قرآن) ھے۔ بیشک! یہ (قرآن) ھدایت ھے اُن پرھیزگاروں کے لئے، جو غیب (وہ حقائق جو انسان کے حواس سے پوشیدہ ھیں اور کبھی براہِ راست عام انسانوں کے مشاھدے میں نھیں آتے) پر آیمان لاتے ھیں، نماز قائم کرتے ھیں، جو رزق "ھم" نے اُن کو دیا ھے اُس میں سے خرچ کرتے ھیں، جو کتاب(قرآن) "تم" پر نازل کی گئی ھے اور جو کتابیں "تم" سے پہلے نازل کی گئیں اُن سب پر ایمان لاتے ھیں اور آخرت پر یقین رکھتے ھیں۔ ایسے لوگ ھی راہِ راست پر ھیں اور وھی فلاح پانے والے ھیں"۔
"آیت 2 تا 5، سورہ البقرہ"۔

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
اسلام علیکم،
اللہ کے نام سے۔
سورہ البقرہ کی آیت 8 تا 12 کا مفہوم! "اُنکے دِلوں میں ایک بیماری ھے جِسے اللہ نے اور بَڑھا دِیا ھے جو جھوٹ وہ بولتے ھیں اُسکے بدلے میں اُنکے لئے دردناک سزا ھے۔ جب کبھی اُنسے کہا گیا کہ زمین میں فساد نہ پھیلاؤ تو اُنھوں نے یہی کہا کہ ھم تو اِصلاح کرنے والے ھیں۔ خبردار! حقیقت میں یہی لوگ مفسد ھیں مگر انھیں شعور نھیں ھے"۔
"صدقہِ جاریہ"

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
"تعزیَّت کی دعا"
"إِنَّ لِلّهِ مَآ اَخَذَ وَ لَہُ مَآ اَعطٰی وَ کُلُ شَیءٍ عِندَہُ بِاَجَلٍ مُّسَمًّی فَلتَصبِر وَ لتَحتَسِب"۔
"اللہ ھی کافی ھے جو اُسنے لیا اور اُسی کا ھے جو اُسنے دیا اور اُسکے پاس ھر چِیز مقررہ وقت کے ساتھ ھے۔ اِس لئے تمہیں چاھئیے کہ صبر کرو اور ثواب کی نیت رکھو"۔
(بخاری و مسلم)
اور یوں کہے تو اچھا ھے
"اَعظَمَ اللہُ اَجرَکَ وَ اَحسَنَ عَزَآءَکَ وَ غَفَرَ لِمَیّتِکَ"۔
"اللہ تعالٰی تمھیں عظیم اجر دے اور تمھیں بہت اچھی تسلی عطا فرمائے اور تمھاری میت کو بخش دے"۔

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"

اسلام علیکم،

مفہومِ آیت 31، سورہ النسآء!

اللہ کے نام سے۔
"مرد عورتوں پر حاکِم ھیں اِس وجہ سے کہ اللہ تعالٰی نے ایک کو دُوسرے پر فضیلت دے رکھی ھے اور اِس وجہ سے کہ مَردوں نے اپنے مال خرچ کئے ھیں، پس نیک و فرمانبردار عورتیں اپنے خاوند کی غیر موجودگی میں، اُسکے مال اور عزت کی مُحافظ بَہ حِفاظتِ اِلٰہی ھیں اور جن عورتوں کی نافرمانی اور بدماغی کا تمہیں خوف ھو اُنھیں نصیحت کرو اور اُنکے بستر الگ کردو اور انھیں مارو، پھر اگر وہ تابعداری کرنے لگیں تو خامخواہ اُنھیں تنگ نہ کرو۔ بیشک اللہ بہت بڑی بُلندی اور بَڑائی والا ھے"۔

"صدقہِ جاریہ"

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"

اللہ کے نام سے۔

اسلام علیکم،
"جو تُم میں سے کوئی بُرائی دیکھے تو اُسے اپنے ھاتھ سے روکے۔ اگر طاقت نہیں تو زبان سے (منع کرے) اور اگر اِسکی بھی طاقت نہیں تو دِل سے (بُرا جانے) اور یہ کمزور ترین اِیمان ھے"۔ (صحیح مسلم)

"تُم ضرور بالضرور اچھائی کا حکم کرتے رھوگے اور بُرائی سے روکتے رھوگے، ورنہ ضرور یہ ھوسکتا ھے کہ اللہ تعالٰی تُم پر اَپنی طرف سے عذاب بھیج دے، پھر تُم اُسے پُکارو گے (لیکن) وہ تُمہاری دُعا قبول نہیں کرےگا"۔ (جامع الترمذی)

"جس قوم میں گُناھوں کا اِرتِکاب ھو رھا ھو اور ان میں اسے روکنے کی طاقت رکھنے والے بھی موجود ھوں، پھر بھی نہ روکیں تو قریب ھے کہ اللہ تعالٰی اُن سب کو اپنی طرف سے عذاب میں مُبتلا کردے"۔ (سنن اَبی داؤد)

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"

اللہ کے نام سے۔

اسلام علیکم،

"حیا اِیمان سے ھے اور اِیمان بہشت میں لے جائے گا اور بے حیائی جَفا سے ھے اور جَفا جَہنّم کا موجب ھے"۔ (جامع الترمذی)

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"

اسلام علیکم،

اللہ کے نام سے۔

اللہ تعالٰی فرماتے ھیں!
"اے نبی! اَپنی بیویوں، بیٹیوں اور مومنین کی عورتوں سے کہیں کہ وہ اپنے اوپر اپنی چادریں لٹکالیں"۔
(سورہ الاحزاب)

اور

اللہ تعالٰی فرماتے ھیں!
"اور اپنی اُڑھنیاں اپنے گریبانوں پر ڈالیں اور اپنی زینت کسی کے سامنے ظاھر نہ کریں لیکن اپنے خاوندوں یا اپنے آباء کے سامنے ۔ ۔ ۔ ۔ ۔"۔
(سورہ النور)

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔

اسلام علیکم،

"ھمارا رب تبارک تعالٰی ھر رات آسمانِ دنیا پر آتا ھے ۔ اُس وقث جب رات کا آخری تہائی حصہ باقی رہ جاتا ھے اور کہتا ھے کہ مجھے کون بلاتا ھے کہ میں اُسے جواب دوں، مجھ سے کون مانگتا ھے کہ میں اُسے عطا کروں مجھ سے کون مغفرت طلب کرتا ھے کہ میں اُس کی مغفرت کروں"۔
(حدیث 7494، جلد۔8، صحیح بخاری)

"صدقہِ جاریہ"

Murad Tariq said...

اسلامُ علیکم،

"کہتا ھوں سچ کسی کو بُرا لگے تو لگے"

"ھم سب (اکثریت) خاص طور پر پہلی، دوسری اور تیسری صف کے میڈیا کے لوگ، سیاست ڈون اُنکے چیلے، نام نِہاد مسلمان علماء و مولوی، اُنکے حواری، سِوِل و فوجی افسر شاہی، نام نہاد دانشور و ادیب، تاریخ داں، سِوِل سوسائٹی، سرمایادار، زمیندار، جاگیردار، پڑھے لکھے جاھل، اور ھم عوام (غلام در غلام) یہودی کی ایجنٹ اور دولت کے پجاری ھیں۔"

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،

"سپنے وہ نہیں ھوتے جو نیند پر آتے ھیں
بلکہ
سپنے وہ ھوتے ہیں جو سونے نہیں دیتے۔

اِسی طرح

اپنے وہ نہیں ھوتے جو رونے پر آتے ھیں
بلکہ
اپنے وہ ھوتے ہیں جو رونے نہیں دیتے"۔

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،
"صدقہِ جاریہ"
"غلام قوم کے معیار بھی عجیب ھوتے ھیں،
شریف کو بیوقف، مکار کو چالاک، قاتل کو بہادُر اور مالدار کو بڑا آدمی سمجھتے ھیں"۔
(مولانا عبیداللہ سندھی رحمت اللہ علیہ)

Murad Tariq said...

حدیث 292، جلد 1، صحیح بخاری۔
حضرت عثمان رضی اللہ عنہ سے پوچھا گیا، "کہ مرد اپنی بیوی سے ھم بستر ھوا لیکن انزال نہیں ھوا تو وہ کیا کرے؟
فرمایا کہ میں نے آپ صلی اللہ علیہ وسلم سنا کہ "عضو کو دھو لے اور نماز کی طرح وضو کرے۔(ابتدائے اسلام میں یہی حکم تھا، بعد میں منسوخ ھوگیا)
حدیث 293، جلد 1، صحیح بخاری۔
فرمایا"جب مرد جماع کرے اور عورت سے اُسے جو کچھ لگ جائے اُسے دھو لے پھر وضو کرے اور نماز پڑھے۔ اِمام بخاری نے کہا "غسل میں زیادہ اِحتیاط ھے۔ اور یہ آخری احادیث ھم نے اِس لئے بیان کردی تاکہ معلوم ھوجائے کہ اِس مسئلہ میں اِختلاف ھے اور پانی سے غسل کرلینا ھی زیادہ پاک کرنے والا ھے۔
مندرجہ بالا احادیث کی روشنی میں عمل کریں۔

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
اسلام علیکم،
تفسیر اِبنِ کثیر صفحہ 181،
"صحیح مسلم میں حدیث ھے، آپ صلی اللہ علیہ و سلم فرماتے ھیں "شیطان اپنا عرش پانی پر رکھتا ھے پھر اپنے لشکروں کو بہکانے کے واسطے بھیجتا ھے۔ سب سے زیادہ مرتبے والا اُس کے نزدیک وہ ھے جو فتنے میں سب سے بڑھا ھوا ھو۔ یہ جب واپس آتے ھیں تو اپنے بدترین کاموں کا ذکر کرتے ھیں، کوئی کہتا ھے میں نے فلاں کو اِس طرح گمراہ کردیا، کوئی کہتا ھے میں نے فلاں شخص سے یہ گناہ کرایا، شیطان اُن سے کہتا ھے کُچھ نھیں یہ تو معمولی کام ھے یہاں تک کہ ایک آ کر کہتا ھے کہ میں نے فلاں شخص کے اور اُس کی بیوی کے درمیان جھگڑا ڈال دیا۔ یہاں تک کہ جدائی ھو گئی۔ شیطان اُسے گلے لگا لیتا ھے اور کہتا ھے ھاں تو نے بڑا کام کیا، اُسے اپنے پاس بٹھا لیتا ھے اور اُس کا مرتبہ بڑھا دیتا ھے"۔

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،
تفسیر اِبنِ کثیر صفحہ 184 - 185،
"ابو عبداللہ راضی رح جادو کی آٹھویں قِسم چغلی کرنا، جھوٹ سچ مِلا کر کسی کے دِل میں اپنا گھر کر لینا اور خفیہ چالوں سے اُسے اپنا گرویدہ کر لینا، یہ چُغل خوری اگر لوگوں کو بھڑکانے بِدکانے اور اُن کے درمیان عداوت و دشمنی ڈالنے کے لئے ھو تو شرعََا حرام ھے۔ جب اِصلاح کے طور پر اور آپس میں ایک دوسرے مسلمان کو مِلانے کے لئے کوئی ایسی بات کہہ دی جائے جس سے ایک فریق دوسرے فریق سے خوش ھو جائے یا کوئی آنے والی مصیبت مسلمانوں پر سے ٹَل جائے یا کُفار کی قوت زائل ھو جائے۔ اُن میں بَد دِلی پھیل جائے اور مُخالفت اور پھوٹ پڑ جائے تو یہ جائز ھے جیسے حدیث میں ھے کہ وہ شخص جھوٹا نھیں جو بَھلائی کے لئے اِدھر کی اُدھر لے جاتا ھے اور جیسے حدیث میں ھے کہ لڑائی مَکر کا نام ھے اور جیسے نعیم بِن مسعود رضی اللہ عنہ نے جنگِ احزاب کے موقع پر کفارِ عرب اور کفارِ یہود کے درمیان کُچھ اِدھر اُدھر کی اُوپری باتیں کہہ کر جدائی ڈلوادی تھی او اُنھیں مسلمانوں کے مقابلے میں شِکست ھوئی"۔

Murad Tariq said...

اسلام علیکم،
مفہوم و تفسیر،
آیت 6، الرحمٰن،
1۔ "اور بے تنے کے درخت اور تنے دار درخت دونوں سجدہ کرتے ھیں"۔ (اِبنِ کثیر)
2۔ "اور تارے اور درخت سب سجدہ ریز ھیں"۔ (مودودی)
تفسیر اِبنِ کثیر،
"اِس پر تو مُفسرین کا اِتفاق ھے کہ شجر اُس درخت کو کہتے ھیں جو تنے والا ھو لیکن نجم کے معنٰی کئی ایک ھیں، بعض تو کہتے ھیں نجم سے مُراد بیلیں ھیں جن کا تنا نھیں ھوتا اور زمین پر پھیلی ھوئی ھوتی ھیں۔ بعض کہتے ھیں اِن سے مُراد ستارے ھیں جو آسمان میں ھیں۔ یہی قول زیادہ ظاھر ھے گو اول قول اِمام اِبنِ جریر رح کا اختیار کردہ ھے واللہ اعلم۔ قرآنِ کریم کی یہ آیت بھی اس دوسرے قول کی تائید کرتی ھے۔ فرمان ھے ' اَلَم تَرَ اَنَّ اللہَ یَسجُدُلَہُ ' کیا تُو نے نھیں دیکھا کہ اللہ کے لئے آسمان و زمین کی تمام مخلوقات اور سورج، چاند، ستارے، پہاڑ، درخت، چوپائے، جانور اور اکثر لوگ سجدہ کرتے ھیں"۔ صفحہ 407، تفسیر اِبنِ کثیر،
حافظ عماد الدین ابوالفداء اِبنِ کثیر۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
مفہوم و تفسیر،
آیت 21 تا 26، الغاشیہ،
"مفہوم"
"پَس تُو نَصیحت کردیا کر کہ تُو صِرف نَصیحت کرنے والا ھے۔ تُو کُچھ اُن پر داروغہ نَھیں۔ ھاں جو شَخص رُوگَردانی کرے اور کُفر کرے۔ اُسے اللہ بُہت بَڑا عَذاب کَرے گا۔ بیشَک ھَماری ھی طَرف اُن کا لَوٹنا ھے۔ پِھر بیشَک ھَمارے ذِمے ھے اُن سے حِساب لینا۔"
صفحہ 720۔

تفسیر
"اے نَبی! تُم تَو اللہ کی رِسالَت کی تَبلِیغ کِیا کَرو، تُم پَر صِرف بَلاغ ھے، حِساب ھَمارے ذِمے ھے، آپ اُن پَر مُسلط نَھیں ھیں، جَبر کرنے والے نھیں ھیں، ان کے دِلوں میں آپ اِیمان پیدا نھیں کرسکتے،آپ اُنھیں اِیمان لانے پر مجبور نھیں کرسکتے۔ مَگر وہ جو مُنہ موڑے اور کُفر کرے یعنی نہ عمل کرے نہ اِیمان لائے نہ اِقرار کرے، جیسے فرمان ھے ' فَلا صَدَّقَ وَلَا صَلّٰی وَلَا کِن کَذَبَ وَ لَا تَوَلّٰی ' نہ تو سَچا نہ نَماز پَڑھی بَلکہ جُھٹلایا اور مُنہ پھیر لِیا اِسی لِئے اسے بُہت بَڑا عَذاب ھوگا۔ اِن سب کا لوٹنا ھَماری ھی جانِب ھے اور پھر ھم ھی ان سے حِساب لیں گے اور انھیں بَدلہ دیں گے نیکی کا نیک، بَدی کا بَد۔"
صفحہ 721،
تفسیر اِبنِ کثیر،
حافظ عماد الدین ابوالفداء اِبنِ کثیر۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
"غَم و فِکر کی دُعا"
رَسول اللہ صَلی اللہ علیہ و سلم یہ دعا کثرت سے کِیا کرتے تھے۔
1۔ "اَللّٰھُمَّ اِنّی اَعُوذُبِکَ مِنَ الھَمِّ وَ الحُزنِ وَ العَجزِ وَ الکَسَلِ وَ الجُبنِ وَ البُخلِ وَ ضَلَعِ الدِینِ وَ غَلَبَتہِ الرِّجَالِ۔
(حدیث 6369، صحیح بخاری)
"اے اللہ! میں تیری پناہ مانگتا ھوں، فکر اور غم سے اور عاجِز ھو جانے سے اور سُستی سے اور بُخل اور بُزدِلی سے اور قرض کے چڑھ جانے اور لوگوں کے غالِب آ جانے سے"۔ آمین۔
2۔ "اَللّٰھُمَّ اِنّی عَبدُکَ وَابنُ عَبدِکَ وَابنُ اَمَتِکَ نَاصِیَتِی بِیَدِکَ مَاضٍ فِیَّ حُکمُکَ عَدلٌ فِیَّ قَضَآ ؤُکَ اَسئَلُکَ بِکُلِ اسمٍ ھُوَ لَکَ سَمَّیتَ بِہِ نَفسَکَ اَو اَنزَلتَہُ فِی کِتَابِکَ اَو عَلَّمتَہُ اَحَدًا مّن خَلقِکَ اَوِستَاثَرتَ بِہِ فِی عِلمِ الغَیبِ عِندَکَ اَن تجعَلَ القُراٰنَ رَبِیعَ قَلبِی وَ نُورَ صَدرِی وَ جَلَآءَ حُزنِی وَذَھَابَ ھَمِّی۔ (391، مَسنَدِ اِحمَد)
"اے اللہ! میں تیرا بَندہ، تیرے بَندے کا بیٹا اور تیری بَندی کا بیٹا ھوں، میری پیشانی تیرے ھاتھ میں ھے، تیرا حُکم مجھ میں جاری ھے، میرے بارے میں تیرا فیصلہ عدل ھے، میں تجھ سے تیرے ھر خاص نام کے ساتھ سوال کرتا ھوں جو تُو نے خُود اپنا نام رکھا ھے یا اُسے اپنی کتاب میں نازِل کِیا ھے یا اپنی مَخلوق میں سے کسی کو سِکھلایا ھے یا عِلمُ الغَیب میں اسے اپنے پاس رکھنے کو ترجیح دی ھے کہ تُو قُرآن کو میرے دِل کی بَہار اور میرے سینے کا نور اور میرے غم کو دور کرنے والا اور میرے فِکر کو لے جانے والا بَنا دے"۔ آمین۔

"بچہ ھونے پر مبارک باد اور اُس کا جواب"

"بَارَکَ اَللّٰہُ لَکَ فِی المَوھُوبِ لَکَ وَ شَکَرتَ الوَاھِبَ وَ بَلَغَ اَشُدَّہُ وَ رُزِقتَ بِرَّہُ۔

"اللہ تعالٰی! تُمہارے لِئے بَرکت کرےاِس بَچّے میں جو تُمہیں عطا کیا گیا ھے اور تم عطا کرنے والے کا شُکر ادا کرتے رھو اور وہ اپنی پوری قُوَت کو پہنچے اور تُمہیں اس کا حسنِ سُلوک عَطا کِیا جائے"۔ آمین۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
" مَرِیض کی عَیادَت کے وَقت ' دُعَا ' ۔ "
1۔ " لَا بَاسَ طَھُورً اِن شَآءَ اللہُ ۔ "
( 3616، صَحِیح بُخاَرِی۔ )
" کوئی حَرج نہیں، یہ بیماری اللہ نے چاھا تو پاک کرنے والی ھے ۔ "
2۔ " اَساءَلُ اللہَ العَظِیمَ رَبَ العَرشِ العَظِمِ اَن یَّشفِیَکَ " ۔
(3106، اَبُو دَاؤد، 210، تِرمِذِی)
" میں بَڑِی عَظمَت وَالے اللہ سے جو عَرشِ عَظِیم کا ' رَبّ ' ھے، سَوَال کَرتَا ھوں کِہ ' وہ ' تُجھے شفا دے "۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،

" نَفِل نَمَاز دو دو رَکعَت پَڑھنَا ۔ "

رَاوِی، اَبُو قَتَادَہ رَضِی اللہ عَنہُ،
نَبِی کَرِیم صَلی اللہ علیہ و سلم نے فَرمَایا کہ
" جَب کُوئی تُم میں سے مَسجِد میں آئے تو نہ بیٹھے جَب تَک دو رَکعَت (تَحِیتُ المَسجِد کی) نہ پَڑھ لے ۔ "
( 1163، جِلد 2، صَحِیح بُخاَرِی۔ )

رَاوِی، اُنس بِن مَالِک رَضِی اللہ عَنہُ،
" کہ ھَمیں نَبِی کَرِیم صَلی اللہ علیہ و سلم نے (ھَمارے گھر جَب دَعوَت میں آئے تھے) دو رَکعَت نَمَاز پَڑھَائی اور پِھر وَاپِس تَشرِیف لے گئے ۔ "
( 1164، جِلد 2، صَحِیح بُخاَرِی۔ )

رَاوِی، عَبدُاللہ بِن عُمَر رَضِی اللہ عَنہُ،
" کہ میں نے نَبِی کَرِیم صَلی اللہ علیہ و سلم کے سَاتھ ظُھر سے پہلے دو رَکعَت سُنَّت پَڑھی، اورظُھر کے بَعد دو رَکعَت اور جُمَّعہ کے بَعد دو رَکعَت اور مَغرِب کے بَعد دو رَکعَت اور عِشآء کے بَعد بِھی دو رَکعَت (نَمَاز سُنَّت) پَڑھی ھے ۔ "
(1165، جِلد 2، صَحِیح بُخاَرِی۔ )

رَاوِی، جَابِر بِن عَبدُاللہ رَضِی اللہ عَنہُ،
نَبِی کَرِیم صَلی اللہ علیہ و سلم نے جُمعَہ کا خُطبَہ دیتے ھُوئے فَرمَایا کہ
" جَو شَخص بِھی (مَسجِد میں) آئے اور اِمَام خُطبَہ دے رَھَا ھو یَا خُطبَہ کے لِئے نِکَل چُکَا ھو تو وہ دو رَکعَت نَمَاز (تَحِیتُ المَسجِد) پَڑھ لے ۔ "
( 1166، جِلد 2، صَحِیح بُخاَرِی۔ )

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
رَاوِی،مُطَہِرَہ اُمِ سَلمہ رَضِی اللہ عَنہُمَا،
نَبِی کَرِیم صَلی اللہ علیہ و سلم نے اپنے حُجرے کے دَروَازے کے سَامنے جَھگڑے کی آوَاز سُنی اور جَھگڑا کرنے والوں کے پاس تَشرِیف لائے آپ صَلی اللہ علیہ و سلم نے فَرمَایا کہ
" میں بِھی ایک اِنسان ھوں۔ اِس لِئے جَب میرے یَہاں کُوئی جَھگڑا لے کَر آتَا ھے تو ھو سَکتَا ھے کہ (فَرِیقِین میں سے) ایک فَرِیق کی بحث ذوسرے فَرِیق سے عُمدَہ ھو، میں سَمَجھتَا ھوں کہ وُہ سَچَّا ھے۔ اور اِس طَرَح میں اُس کے حَق میں فَیصلَہ کَر دیتَا ھوں۔ لیکِن اگر میں اُس کو (اُس کے ظَاھِرِی بَیَان پَر بَھروسَہ کَرکے) کِسِی مُسَلمَان کا حَق دِلَا دوں تَو دوزَخ کا ایک ٹُکڑَا اُس کو دِلَا رَھَا ھوں، وہ لے لے یَا چھوڑ دے ۔ "
"تشریح"
"یعنی جب تک اللہ کی طرف سے مجھ پر وحی نہ آئے میں بھی تمہاری طرح غیب کی باتوں سے ناواقف رھتا ھوں۔ کیوں کہ میں بھی آدمی ھوں اور آدمیت کے لوازم سے پاک نہیں ھوں۔ اس حدیث سے صاف یہ نکلتا ھے کہ قاضی کے فیصلے سے وہ چیز حلال نہیں ھوتی اور قاضی کا فیصلہ ظاھراً نافذ ھے نہ باطناً۔ یعنی اگر مدعی ناحق پر ھوا اور عدالت اُس کو کچھ دِلادے تو اللہ اور اُس کے درمیان اُس کے لئے حلال نھیں ھوگا"۔
( صفحہ 580، جلد 3، صَحِیح بُخاَرِی۔ )

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔

اسلام علیکم،

"ان میں ایک دُوسرا گِروہ اُمّیوں کا ھے جو کِتاب کا تو عِلم نھیں رَکھتے، بَس اَپنی بے بُنِیاد اُمِیدوں اور آرزُؤں کو لِئے بیٹھے ھیں اور مِحض وھم و گُمَان پَر چَلے جَا رَھے ھیں ۔ پَس تَبَاھِی اور ھَلَاکَت ھے اُن لوگوں کے لِئے جو اَپنے ھَاتھوں سے شَرَع کا نوشتہ لِکھتے ھیں پِھر لوگوں سے کہتے ھیں کِہ یہ اللہ کے پَاس سے آیَا ھُوَا ھے تَاکِہ اس کے مُعَاوِضے میں تھوڑا سَا فَائِدَہ حَاصِل کرلیں۔ اُن کے ھَاتھوں کا یہ لِکھا بھی اُن کے لِئے تَبَاھِی کا سَامَان ھے اور اُن کی یہ کَمَائی بھی اُن کے لِئے مُوجِبِ ھَلَاکَت۔ وہ کہتے ھیں کہ دوزَخ کی آگ ھَمیں ھَرگِز چُھونے وَالِی نَھیں، الَّا یہ کہ چَند روز کی سَزَا مِل جَائے تو مِل جَائے۔ اُن سے پُوچھو، کِیا تُم نے اللہ سے کوئی عہد لے لِیَا ھے، جِس کی خِلَاف وَرزِی وہ نَہیں کَرسَکتَا یَا بَات یہ ھے کہ تُم اللہ کے ذِمّے ڈَال کَر ایسی بَاتیں کِہہ دیتے ھو جِن کے مُتَعلِق تُمھیں عِلم نَھیں ھے۔ آخِر تُمھیں دُوزَخ کِی آگ کِیوں نَہ چُھوئے گی؟ جو بِھی بَدی کَرے گا اور خَطا کَارِی کے چَکر میں پَڑَا رَھیگَا وہ دُوزَخی ھے اور دُوزَخ ھی میں ھَمیشَہ رَھیگا اور جو لوگ اِیمَان لائیں گے اور نیک عَمَل کریں گے وھی جَنَّتِی ھیں اور ھَمیشَہ جَنَّت میں رَھیں گے"۔
"آیت 78 تا 82، سورہ البقرہ"۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
"اور جَب اُس سے کہا جَاتَا ھے کہ اللہ سے ڈَرو تو اَپنے وَقَار کا خَیَال اُس کو گنَاہ پر جَما دیتا ھے۔ ایسے شَخص کے لِئے بَس دُوزَخ ھی کَافِی ھے اور وہ بُہت بُرَا ٹِھکَانَا ھے"۔
"آیت 206، سورہ البقرہ"۔

Murad Tariq said...

" اَللہُ اَکبَر"
" سُبحَانَ اللہ "
" مَا شَآءَ اللہ "
" جَزَاکَ اللہ "
" بَیشَک "
" اَسَّلَامُ عَلَیکُم وَ رِحمَتُ اللہِ وَ بَرکَاتُہُ "
" وَ عَلَیکُم اَسَّلَام وَ رِحمَتُ اللہِ وَ بَرکَاتُہُ "
"آمین"

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔

اسَّلامُ عَلَیکُم،

برائے مھربانی قرآن پڑھو، پڑھاؤ، سمجھو، سمجھاؤ عمل کرو اور عمل کرنے کی تلقین کرو۔ اللہ اور محمد صلی اللہ علیہ و سلم کی اطاعت کرو۔
جزاءک اللہ۔
طالبِ دُعا و خیر اندیش،
مُراَد طاَرِق ولد صَلاحُ دِین احمد

اللہ کے نام سے۔

اسَّلامُ عَلَیکُم،

1.
" مَفہُوم، آیَّت 55-56، سُورَہ المَآئِدَہ"

" تُمھارے دوست تو حَقیقَت میں صِرف اللہ اور اللہ کا رَسول (صَلی اللہ عَلَیہ ِ وَ سَلَّم) اور وہ اِھلِ اِیمان ھیں جو نَماز قائم کرتے ھیں، زَکوٰت دیتے ھیں اور اللہ کے آگے جُھکنے والے ھیں۔ جو اللہ اور اُس کے رسول (صَلی اللہ عَلَیہ ِ وَ سَلَّم) اور اِھلِ اِیمان کو اَپنا رَفیق بَنا لے اُسے مَعلوم ھو کہ اللہ کی جَماعَت ھی غالِب رِھنے والی ھے "۔

2.
َ" مَفہُوم، آیَّت 54، سُورَہ المَآئِدَہ"

" اے اِیمَان والو، اگر تُم میں سے کوئی اَپنے دِین سے پِھرتا ھے (تو پِھر جائے) اللہ بُہت سے ایسے لوگ پَیدا کر دے گا جو اللہ کو مِحبوب ھوں گے اور اللہ اُن کو مِحبوب ھو گا، جو مومِنوں پَر نَرم اور کُفَّار پَر سَخت ھوں گے، جو اللہ کی راہ میں جدوجہد کریں گے اور کِسی مَلامَت کرنے والے سے نَھیں ڈَریں گے۔ یہ اللہ کا فَضل ھے جِسے چاھتا ھے عَطا کرتا ھے۔ اللہ وَسیع ذَرائع کا مالِک اور سَب کُچھ جانتا ھے "۔

3.
" مَفہُوم، آیَّت 51، سُورَہ المَآئِدَہ"

" اے اِیمَان والو، تُم یَھُود و نَصٰریٰ کو اَپنا دوست نہ بَناؤ۔ یہ تو آپَس میں ھی ایک دوسرے کے دوست ھیں۔ تُم میں سے جو بھی اِن میں سے کسی سے دوستی کرے، وہ اِنھی میں سے ھے، ظالِموں کو اللہ تَعالٰی رَاہِ راست نھیں دِکھاتا "۔

4.
" مَفہُوم، آیَّت 115، سُورَہ النِسَآء"

" جَو شَخص رَسُول (صَلی اللہ عَلَیہِ وَ سَلَّم) کی مُخَالِفَت پَر کَمَر بَستَہ ھو اور اِھلِ اِیمَان کی رَوِش کے سِوَا کِسی اور رَوِش پَر چَلَے جَب کہ اُس پَر رَاہِ رَاست وَاضِح ھو چُکِی ھو، تو ھَم اُس کو اُسی طَرَف چَلَائیں گے جِدَھر وہ خُود پِھر گیا اور اُسے جَہَنَّم میں جھونکیں گے جو بَدتَرِین جَگہ ھے" ۔

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔

اسَّلامُ عَلَیکُم،


1.
" اور حَقِیقَت جَاننے کے لئے بَس اللہ ھی کا عِلم کافی ھے" ۔
"آیت 70، سورہ النِسَآء"

2.
"کِیا تُم نے اُن لوگوں کو نھیں دیکھا، جِنھیں کِتاب کے عِلم میں سے کُچھ حِصہ دِیا گَیا ھے اور اُنکا حال یہ ھے کہ ' جُبت ' اور ' طَاغُوت ' کو مانتے ھیں اور کافِروں کے مُتَعلِق کہتے ھیں کہ اِیمَان لَانے وَالوں سے تو یہی صَحِیح راستے پَر ھیں۔ ایسے ھی لوگ ھیں جِن پَر اللہ نے لَعنَت کی ھے اور جس پَر اللہ لَعنَت کردے پِھر تُم اُسکا کوئی مَدَدگار نھیں پَاؤگے"۔
"آیت 50-51، سورہ النِسَآء"

3.
"کِیا تُم نے اُن لوگوں کو نھیں دیکھا، جِنھیں کِتاب کے عِلم میں سے کُچھ حِصہ دِیا گَیا ھے اور اُنکا حال یہ ھے کہ ' جُبت ' اور ' طَاغُوت ' کو مانتے ھیں اور کافِروں کے مُتَعلِق کہتے ھیں کہ اِیمَان لَانے وَالوں سے تو یہی صَحِیح راستے پَر ھیں۔ ایسے ھی لوگ ھیں جِن پَر اللہ نے لَعنَت کی ھے اور جس پَر اللہ لَعنَت کردے پِھر تُم اُسکا کوئی مَدَدگار نھیں پَاؤگے"۔
"آیت 50-51، سورہ النِسَآء"

4.
"کِیا تُم نے اُن لوگوں کو نھیں دیکھا، جِنھیں کِتاب کے عِلم میں سے کُچھ حِصہ دِیا گَیا ھے اور اُنکا حال یہ ھے کہ ' جُبت ' اور ' طَاغُوت ' کو مانتے ھیں اور کافِروں کے مُتَعلِق کہتے ھیں کہ اِیمَان لَانے وَالوں سے تو یہی صَحِیح راستے پَر ھیں۔ ایسے ھی لوگ ھیں جِن پَر اللہ نے لَعنَت کی ھے اور جس پَر اللہ لَعنَت کردے پِھر تُم اُسکا کوئی مَدَدگار نھیں پَاؤگے"۔
"آیت 50-51، سورہ النِسَآء"

Murad Tariq said...

"بھیگ جاتے ھیں"
سنا ھوگا بہت تم نے
کہیں آنکھوں کی رم جھم کا
کہیں پلکوں کی شبنم کا
پڑھا ھوگا بہت تم نے
کہیں لہجے کی بارش کا
کہیں آنسوں کے ساگر کا
مگر تم نے کبھی ھمدم
کہیں دیکھے کہیں پڑھے؟
کسی تحریر کے آنسو؟
مجھے تیری جدائی نے
یہی معراج بخشی ھے
کہ میں جو لفظ لکھتا ھوں
لفظ وہ بھیگ جاتے ھیں۔

Murad Tariq said...

اَللہ کے نام سے۔
اَسَّلامُ عَلَیکُم،
" بِیمار پُرسِی کی فَضِیلَت "
رَسُول اللہ صَلی اللہ عَلَیہِ وَ سَلَّم نے فَرمایا،
" آدمی جَب اَپنے بَھائی کی بِیمار پُرسی کے لِئے جاتا ھے تو وہ جَنَّت کے میووں میں چَلتا ھے یَہاں تَک کہ بیٹھے، جَب بَیٹھ جاتا ھے تو اُسے رِحمَت ڈَھانپ لیتی ھے اَگر صُبَح کا وَقت ھو تو شام تَک سَتَّر ھَزار فَرِشتے اُس کے لِئے دُعا کَرتے رِھتے ھیں اور اَگر شام کا وَقت ھو تو سَتَّر ھَزار فَرِشتے صُبَح تَک اُس کے لِئے دُعا کَرتے رِھتے ھیں "۔
اِبنِ ماجَہ، مَسنَدِ اِحمَد، صَحِیح تِرمِذِی۔
" بِیمَار پُرسِی کے وَقت دُعَا "
رَسُول اللہ صَلَّی اللہ عَلَیہِ وَ سَلَّم جَب کِسی بِیمَار کے پَاس بِیمَار پُرسِی کَرتے تو اُسے فَرمَاتے، " لَا بَاسَ طَھُورُُ اِن شَآءَ اَللہ " (کوئِی حَرج نَھیں، یہ بِیماری اَللہ نے چاھا تو پاک کَرنے والی ھے۔)
3616، صَحیح بُخاری۔
کوئِی مُسَلمان اَیسے مَرِیض کی بِیمار پُرسِی کَرے جِس کی مَوت کا وَقت نَہ آ پُہنچا ھو اور سات دَفَع یہ کہے تَو اُسے عافِیَت دِی جاتی ھے۔
" اَساءَلَ اللہَ العَظِیمَ رَبَّ العَرشِ العَظِیمِ اَن یَّشفِیَکَ "۔ (میں بَڑی عَظمَت والے اللہ سے جو عَرشِ عَظِیم کا رَبّ ھے، سَوَال کَرتا ھوں کہ وہ تُجھے شفا دے۔)
اَبُو دَاؤد، صَحِیح التِرمِذِی۔
"صَدقَہِ جارِیَہ"

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسلام علیکم،
"مفہومِ حدیث"
راوی۔ معاویہ رضی اللہ عنہ
آپ صلی اللہ علیہ و سلم نے فرمایا،
"جس شخص کے ساتھ اللہ تعالٰی بھلائی کا ارادہ کرے اسے دین کی سمجھ عنایت فرما دیتے ہیں اور میں تو محض تقسیم کرنے والا ہوں دینے والا تو اللہ ہی ہے اور یہ امت ہمیشہ اللہ کے حکم پر قائم رہے گی اور جو شخص ان کی مخالفت کرے گا انہیں نقصان نہیں پہنچا سکے گا یہاں تک کہ اللہ کا حکم (قیامت) آجائے (اور یہ عالم فنا ہو جائے)"۔
حدیث 71،
جلد۔1، صحیح بخاری۔

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" پَس (یہ حَقِیقَت ھے کہ) جِسے اللہ ھِدایَت بَخشنے کا اِرادہ کَرتا ھے اُس کا سِینہ اِسلام کے لئے کھول دیتا ھے اور جِسے گُمراھی میں ڈالنے کا اِرادہ کَرتا ھے اُس کے سِینَہ کو تَنگ کَر دیتا ھے اور ایسا بِھینچتا ھے کہ اُسے یُوں مَعلُوم ھونے لَگتا ھے کہ گویا اُس کی رُوح آسمان کی طَرَف پَرواز کَر رَھی ھے۔ اِس طَرَح اللہ (حَق سے فَرار اور نَفرَت کی) ناپَاکی اُن پَر مُسَلَّط کَر دَیتا ھےجو اِیمان نَھیں لاتے "۔
"آیت 125، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" اَکثَر لوگ صِرف اَپنی خُوَاہِشوں کی بِنا پَر بَغَیر عِلم کے دُوسرُوں کو بِہکاتے رِہتے ھیں۔ ھَر ایک حَد سے تَجاوز کَرنے والے کو اللہ خُوب جانتا ھے۔ کُھلے چُھپے ھَر قِسم کے گُناہ چُھوڑ دو۔ گُناہ کَرنے والے کو اُس کے گُناھوں کی سَزا یَقِیناً دِی جائے گی "۔
"آیت 120، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ
"
اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" دُنیا میں اَکثَر لوگ ایسے ھیں کہ اَگر تُو اُن کے کہے پَر چَلے تو وہ تُجھے راہِ اللہ سے بَھٹکا دَیں۔ وُہ تو صِرف گُمان کے پیچھے پَڑے ھوئے ھیں اور اَٹکَل پچو باتیں ھی بَناتے ھیں۔ تیرا "رَبَّ" ھی اُنھیں بَخوبی جانتا ھے جواُس کی راہ سے بَھٹکے ھوئے ھیں۔ جو راہِ راست پَر ھیں اُنھیں بھی وہ خوب جانتا ھے "۔
"آیت 117، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

"صدقہِ جاریہ"
اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" لوگو! تُمہارے پاس تُمہارے " رَبَّ " کی طَرَف سے دَلِیلیں آچکی، اَب جو دیکھے وہ اُس کا اَپنا ہِی نَفَع ھے اور جواَندھَا ھو جائے اُس کا وَبال اُسی پَر ھے، میں تُم پَر کوئی مُحافِظ تو نھیں۔ "ھَم" تو اِسی طَرَح سے نِشانیاں بَیان کَر دیتے ھیں تاکہ وہ بِھی قائِل ھو جائیں کہ تُونے پَڑھ سُنایا اور اِس لِئے بھی کہ ھَم اِسے عِلم والوں کے لِئے وَاضِح کَر دیں "۔
"آیت 104-105، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" جَب تُم دیکھو کہ لوگ ھَماری آیات پَر نُکتہ چینی کر رَھے ھیں تو اُن کے پاس سے ھَٹ جاؤ، یہاں تک کہ وہ اُس گُفتُگو کو چھوڑ کر دُوسری باتوں میں لَگ جائیں اور اَگَر کَبِھی شَیطان تُمہیں بُھلاوے میں ڈال دے تو جِس وقت تُمہیں اِس غَلَطی کا اِحساس ھو جائے اُس کے بَعد پِھر ایسے ظالِموں کے پاس نہ بیٹھو۔ اُن کے حِساب میں سے کِسی چیز کی ذِمہ داری پَرھَیزگار لوگوں پَر نَھیں ھے، اَلبَتَّہ نَصیحَت کرنا ان کا فَرض ھے شایَد کہ وہ غَلَط روی سے بَچ جائیں۔ چھوڑو اُن لوگوں کو جِنھوں نے اَپنے دِین کو کھیل تَماشا بَنا رَکھا ھے اور جِنھیں دُنیا کی زِندَگی فَریب میں مُبتِلا کِئے ھوئے ھے۔ ھاں مَگَر قُرآن سُنا کَر نَصِیحَت اور تَنبیہ کَرتے رَھو کہ کَہیں کوئی شَخص اَپنے کِئے کَرتوتوں کے وَبال میں گِرفتار نہ ھوجائے اور گِرفتار بھی اِس حال میں ھو کہ اللہ سے بَچانے والا کوئی حامی و مَدَدگار اور کوئی سِفارشی اس کے لئے نہ ھو، اور اَگَر وہ ھَر مُمکِن چیز فِدِیَہ میں دے کَر چھوٹنا چاھے تو وہ بِھی اُس سے قُبول نہ کی جائے، کیونکہ ایسے لوگ تو خود اَپنی کَمائِی کے نَتیجہ میں پَکڑے جائیں گے، اِنکو اَپنے اِنکارِ حَق کے مُعاوِضہ میں کَھولتا ھوا پانی پینے کو اور دَرد ناک عَذاب بُھگَتنے کو مِلے گا "۔
"آیت 68 ۔ 70، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

اللہ کے نام سے۔
اسَّلامُ عَلَیکُم،
" اُن سے پوچھو، کِیا ھَم اللہ کو چھوڑ کَر اُن کو پُکاریں جو نَہ ھَمیں نَفَع دے سَکتے ھَیں نَہ نُقصان؟ اور جَب کہ اللہ ھَمیں سِیدھا راستہ دِکھا چُکا ھے تو کِیا ھَم اُلٹے پاؤں پِھر جائیں؟ کیا ھَم اَپنا حال اُس شَخص کا سا کَر لیں جِسے شَیطانوں نے صِحرا میں بَھٹکا دِیا ھو اور وہ حَیران و سَرگَرداں پِھر رَھا ھو حالانکِہ اُس کے ساتھی اُسے پُکار رَھے ھوں کہ اِدھر آ یہ سِیدھی راہ موجود ھے؟ کَہو، حَقِیقَت میں تو صَحیح رَھنُمائی تو صِرف اللہ ھی کی ھے اور اُسکی طَرَف سے ھَمیں یہ حُکم مِلا ھے کہ مالکِ کائنات کے آگے سرِ اَطاعَت خَم کَردو، نَماز قَائِم کَرو اُس کی نافَرمانی سے بَچو، اُسی کی طَرَف تُم سَمیٹے جاؤ گے "۔
"آیت 71-72، سورہ الاِنعام"

Murad Tariq said...

بَرِصَغِیر کی تَقسِیم کے کُچھ دِنوں بَعد ایک ھِندُو لِیڈَر نے کَہا تَھا کِہ
" ھِندُوستَان سے کَافی گَند چَھٹ (چَلا) گیا "
بِالکُل، آج یَہاں پَر نَظَر آ رَھَا ھے۔
" ھِندُو ستَانِی پَنَاھگِیر( اَکثَرِیَت ) " غَاصِب اور ظَالِم "

Post a Comment


 
Design by Lashkar E Islam | Developed by Lashkar E Islam - E-mail | Lashkar E Islam